Pages

میرے چاروں طرف افق ہے جو ایک پردہء سیمیں کی طرح فضائے بسیط میں پھیلا ہوا ہے،واقعات مستقبل کے افق سے نمودار ہو کر ماضی کے افق میں چلے جاتے ہیں،لیکن گم نہیں ہوتے،موقع محل،اسے واپس تحت الشعور سے شعور میں لے آتا ہے، شعور انسانی افق ہے،جس سے جھانک کر وہ مستقبل کےآئینہ ادراک میں دیکھتا ہے ۔
دوستو ! اُفق کے پار سب دیکھتے ہیں ۔ لیکن توجہ نہیں دیتے۔ آپ کی توجہ مبذول کروانے کے لئے "اُفق کے پار" یا میرے دیگر بلاگ کے،جملہ حقوق محفوظ نہیں ۔ پوسٹ ہونے کے بعد یہ آپ کے ہوئے ، آپ انہیں کہیں بھی کاپی پیسٹ کر سکتے ہیں ، کسی اجازت کی ضرورت نہیں !( مہاجرزادہ)

جمعہ، 21 جنوری، 2022

لا رسول ولا نبي بعد محمد رسول الله وخاتم النبيين

  ! اُفق کے بار بسنے والے ، نیک دل  دوستو 

مضمون کا ٹائٹل یقیناً آپ کو چونکا دینے والا ہوگا ۔ وٹس ایپ کی  دیگر مساجد للہ کی طرح  ایک مسجد حریّتِ افکار پر  فجر کے وقت کل کی ایک پوسٹ پڑھی ۔ جس میں ایک نوجوان محمد بندھانی نے اپنا فہم پوسٹ کیا :۔   

نیک دل انسان ، کائینات کے خالق کے، کُن کے اَمرکی لہریں، کائینات میں روزِ اوّل سے گردش کر رہی ہیں- جو انسانی فہم کائینات میں موجود ، کُن سے تخلیق ہونے والی آیات کے متعلق بناتی ہیں ۔ آیات محکمات ہیں اور حواسِ خمسہ سے بننے والے انسانی ذہن میں مفہوم متشھابھات۔ 

 آپ کے فہم کو تقویت دینے کے لئے خَاتَمَ النَّبِيِّينَ نے اللہ کا یہ حکم پھیلایا :

وَمَا أَرْسَلْنَا مِن قَبْلِكَ مِن رَّسُولٍ وَلَا نَبِيٍّ إِلَّا إِذَا تَمَنَّى أَلْقَى الشَّيْطَانُ فِي أُمْنِيَّتِهِ فَيَنسَخُ اللَّهُ مَا يُلْقِي الشَّيْطَانُ ثُمَّ يُحْكِمُ اللَّهُ آيَاتِهِ وَاللَّهُ عَلِيمٌ حَكِيمٌ [22:52]

لہذا ۔   بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ سے مِنَ الْجِنَّةِ وَ النَّاسِ تک القرآن عربی کے الفاظ  جو حفّاظ میں محفوظ ہیں ، خَاتَمَ النَّبِيِّينَ سے لے کر اب تک کسی  الشَّيْطَانُ کا القاء نہیں ۔

   بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ سے مِنَ الْجِنَّةِ وَ النَّاسِ سے باہر کیا ہیں ؟
وہ سب انسانی مفہوم ہیں جو القرآن کی عربی آیات سے پھیلے ، میرے فہم کے مطابق  ، " لا نبی بعدی " کا فہم ہے ۔
لیکن مجھے حیرانگی ہوتی ہے کہ "  لَا رَّسُولٍ وَلَا نَبِيٍّ مِن بَعْدِي " کا فہم کیوں  نہیں پھیلایا گیا ؟؟
شائد  ایک چور دروازہ ، ماہرین لَغویات نے اپنے لئے کُھلا رکھنا تھا۔

وہ چور دوازہ کھولنے کا واحد راستہ ۔
رَحْمَةً لِّلْعَالَمِينَ ۔ مُحَمَّد رَّسُولَ اللَّـهِ وَخَاتَمَ النَّبِيِّينَ القرآن کے پہلے حافظ کو درمیان سے ہٹا کر ، إِنَّا أَرْسَلْنَاكَ کا خَاتَمَ النَّبِيِّينَ کو دیا گیا حکم، تمام
لَغویات   کے ماہر : اپنی طرف اللہ کا اشارہ لیتے ہیں ۔ القرآن کی ایک  آیت سے اپنا فہم بنا کر نکالتے ہیں ۔

وَمَا أَرْسَلْنَا مِن رَّسُولٍ إِلاَّ بِلِسَانِ قَوْمِهِ لِيُبَيِّنَ لَهُمْ فَيُضِلُّ اللّهُ مَن يَشَاءُ وَيَهْدِي مَن يَشَاءُ وَهُوَ الْعَزِيزُ الْحَكِيمُ [14:4]
اور اپنے سامنے بیٹھے ہوئے ، سننے یا پڑھنے والے بشر کو قائل کرنے کے لئے، بشیر بنتے ہوئے،  یہ آیت پیش کرتے ہیں۔
وَمَا كَانَ لِبَشَرٍ أَن يُكَلِّمَهُ اللَّهُ إِلَّا وَحْيًا أَوْ مِن وَرَاءِ حِجَابٍ أَوْ يُرْسِلَ رَسُولًا فَيُوحِيَ بِإِذْنِهِ مَا يَشَاءُ إِنَّهُ عَلِيٌّ حَكِيمٌ  [42:51]

! اُفق کے بار بسنے والے ، نیک دل  دوستو  

 یہ فہم اپنے دماغ میں پختہ (سدید) کر لیں کہ  
" لا رسول ولا نبي بعد محمد  رسول الله وخاتم النبيين  "

لہذا ،
بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ سے مِنَ الْجِنَّةِ وَ النَّاسِ  تک عربی کے الفاظ کے علاوہ سارے اعمال و افعال انسانی فہم کا نتیجہ ہیں کو ایک انسان اپنے نفس کو فجور اور تقوا کے ذہنی اوزان کو أفلح (محکمات) یا  خاب (متشابھات ) کے اوزان سے متوازن رکھنے کے لئے ، بناتا ہے ۔

اُفق کے بار رہنے والے  دوستو ، یہ میرا فہم ہے جو میں آپ سے شیئر کرتا ہوں ۔
آپ بھی اللہ کے انسان کے لئے امر ، جو
خَاتَمَ النَّبِيِّينَکے نشریاتی رابطے سے انسان کے لئے کائینات میں پھیل رہا ہے اور رہتا رہے گا کو بِسْمِ اللَّهِ الرَّحْمَنِ الرَّحِيمِ سے مِنَ الْجِنَّةِ وَ النَّاسِ  کے درمیان ٹیون کرکے کے ، اِسی کے درمیان رہتے ہوئے ،
 آپ کے اردگرد پھیلی ہوئی کائینات( جس کا مرکز آپ ہیں ) سے اپنا فہم اخذ کریں ، عمل کریں اور افعال ہو ہوبہو شیئر کریں
اللہ ہم سب کو شیطانی  نشریاتی رابطے سے محفوظ رکھے ، آمین ثم آمین شکریہ

 

٭٭٭٭٭٭

خیال رہے کہ "اُفق کے پار" یا میرے دیگر بلاگ کے،جملہ حقوق محفوظ نہیں ۔ !

افق کے پار
دیکھنے والوں کو اگر میرا یہ مضمون پسند آئے تو دوستوں کو بھی بتائیے ۔ آپ اِسے کہیں بھی کاپی اور پیسٹ کر سکتے ہیں ۔ ۔ اگر آپ کو شوق ہے کہ زیادہ لوگ آپ کو پڑھیں تو اپنا بلاگ بنائیں ۔